بالوں میں کنگھا کرنا

بالوں میں کنگھا کرنا مستحب ہے۔ حضور ﷺ نے اس کی ترغیب بھی فرمائی ہے خود بھی اپنے مبارک بالوں میں کنگھا کیا کرتے تھے۔

ترجمہ: حضرت عائشہ رضی اللہ تعالی عنہا فرماتی ہیں کہ میں حضور اقدس ﷺ کے بالوں میں کنگھا کرتی تھی حالانکہ میں حائضہ ہوتی تھی۔

فائدہ: اس حدیث سے علما نے یہ مسئلہ ثابت فرمایا ہے کہ حائضہ کو حالت حیض میں مرد کی خدمت کرنا جائز ہے۔ حیض سے عورت کا تمام جسم نجس نہیں ہوتا صحبت وغیرہ البتہ ناجائز ہے

ترجمہ: حضرت انس فرماتے ہیں کہ حضور اقدس اپنے سر مبارک پر اکثر تیل کا استعمال فرماتے تھے اور اپنی داڑھی مبارک میں اکثر کنگھی کیا کرتے تھے اور اپنے سر مبارک پر ایک کپڑا ڈال لیا کرتے تھے جو تیل کی کثرت استعمال سے ایسا ہوتا تھا جیسے تیل کا کپڑا ہو

ترجمہ: حضرت عائشہ فرماتی ہیں کہ حضور اقدس اپنے وضو کرنے میں کنگھی کرنے میں جوتہ پہننے میں غرض ہر امر میں دائیں کو مقدم رکھتے تھے یعنی پہلے دائیں پھر پائیں جانب کنگھا کرتے