نجاست حقیقیہ

نجاست حقیقیہ کی دو اقسام ہیں۔ ۱۔ نجاست غلیظہ ۲۔نجاست خفیفہ

نجاست غلیظہ: یہ وہ نجاست ہے جس کی ناپاکی زیادہ سخت ہو۔ اور اس کی بہت تھوڑی مقدار معاف ہو مثلا شراب، انسان کا پیشاب، پاخانہ، من کون ، اور مرغی اور مرغابی اور بطخ کی بییٹ بھی نجس ہے۔ اور حرام جانوروں کا پیشاب بھی نجس ہے۔

نجاست خفیفہ: یہ وہ نجاست ہے جس کی ناپاکی قدرے کم ہو۔ مثلا تمام حرام پرندوں کی بیٹ اور تمام حلال جانوروں کا پیشاب نجاست خفیفہ ہے۔

حکم: اگر نجاست خفیفہ کپڑے یا بدن کے چوتھاءی حصے کے برابر یا زیادہ لگی ہو تو معاف نہیں ہے اگر چوتھاءی حصے سے کم ہو تو معاف ہے

نجاست خفیفہ کو زاءل کرنے کی دو شرطیں ہیں

۱۔ بدن یا لباس پر جہاں نجاست لگی ہو اس جگہ سے نجاست اتار لیں
۲۔ جہاں سے نجاست اتاری ہے اس جگہ کو اچھی طرح دھو لیں

مختلف اشیاء کو دھونے کے مختلف طریقے

جو چیزیں نجاست چوس لیتی ہیں جیسے کپڑے وغیرہ ان کو دھونے میں دو کام کرنے ضروری ہیں

۱۔ نجاست کو اتار کر تین بار دھونا
۲- ہر بار نچوڑنا

جو چیزیں نچوڑنے سے نہ نچڑیں جیسے قالین اور مٹی کے برتن وغیرہ ان کو پاک کرنے کا طریقہ یہ ہے ان کو اچھی طرح تین بار دھوءیں اور جو چیزیں نجاست کو نہیں چوستیں ان کو مٹی وغیرہ سے رگڑکر صاف کیا جا سکتا ہے مثلا جوتا، چمڑا وغیرہ